دہشتگردی کے خاتمے کیلئے سکیورٹی اداروں کی حمایت کی جانی چاہئے، نواز شریف

دہشتگردی کے خاتمے کیلئے سکیورٹی اداروں کی حمایت کی جانی چاہئے، نواز شریف

دہشتگردی کے خاتمے کیلئے سکیورٹی اداروں کی حمایت کی جانی چاہئے، نواز شریف

صدر مسلم لیگ (ن) میاں نواز شریف نے کہا کہ امن و امان کا سرمایہ کاری اور پاکستان کی ترقی و خوشحالی سے گہرا تعلق ہے ۔ دہشتگردی کےخاتمے کیلئے تمام سکیورٹی کے ادارے اور افواج پاکستان کی مکمل حمایت کرنی چاہئے۔

میاں نواز شریف نے سینیٹر عرفان صدیقی سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دہشتگردی کے خاتمے کیلئے مسلح افواج اور سکیورٹی فورسز کے اداروں کی حمایت کے لئے پارلیمنٹ کو توانا کردار ادا کرناچا ہئے۔

صدر مسلم لیگ (ن) نواز شریف کو سینیٹر عرفان صدیقی نے سینٹ میں پارلیمانی پارٹی کی کارکردگی کے حوالے سے رپورٹ پیش کی۔

ملاقات کے دوران نواز شریف نے کہا کہ پاکستان میں عدم استحکام پیدا کرنے والے اور ملک کو بدنام کرنے والے عناصر کا جمہوریت سے کوئی لینا دینا نہیں ہے انہیں عوام کے مسائل سے بھی کوئی دلچسپی نہیں ہے۔ یہ لوگ پاکستان کی بدنامی یا کمزوری کو سیاسی کامیابی خیال کرتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہاکہ چند سال پہلے جب ہماری حکومت تھی ہم نے بہت سے مسائل پر قابو پا لیا تھا لیکن آج پھر پاکستان میں مسائل سنگین شکل اختیار کر چکے ہیں۔ ہماری حکومت ان مسائل پر قابوپانے کی کوششیں کر رہی ہے انشاء اللہ جلد کی ان مسائل پر قابو پا لیا جا ئے گا۔

نواز شریف کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ (ن) کی حکومت اور قیادت نے 7 سال پہلے مہنگائی، لوڈشیڈنگ اور دہشتگردی جیسے مسائل سے اچھے طریقے سے نمٹا تھا۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے آئی ایم ایف سے نجات حاصل کر لی تھی یہ لوگ پھر آئی ایم ایف کو دوبار لائے، 2018 میں ملکی تباہی و بربادی اور ہر شعبے میں زوال کا جو سلسلہ شروع ہوا اس نے عوام کیلئے سنگین مسائل پید کر دیے۔ عوام کے ان تما مسائل کے حل کیلئے کچھ وقت درکار ہے ، حکومت عوام کے مسائل پر قابو پانے کیلئے دن رات کوشاں ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں