شدید گرمی ، عازمین شام 4 بجے کے بعد رمی کی رسومات ادا کریں،ہدایات

شدید گرمی ، عازمین شام 4 بجے کے بعد رمی کی رسومات ادا کریں،ہدایات

سعودی حکام نے شدید گرمی کے پیش نظر رمی کی رسومات شام کے اوقات میں ادا کرنے کی ہدایات جاری کر دیں ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سعودی عرب شدید گرمی کی لپیٹ میں ہے، وہاں آج زیادہ سے زیادہ درجہ حراست 44 ڈگری سینٹی گریڈ جبکہ کم سے کم 29 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

شدید گرمی کے پیش نظر سعودی حکومت نے رمی کی رسومات کو دن کے اوقات کار کے بجائے شام میں ادا کرنے کی ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ عازمین شام 4 بجے کے بعد رمی کی رسومات ادا کریں۔

ایک حکومتی ترجمان نے بتایا ہے کہ انتہائی گرم موسم کی وجہ سے عازمین 4 بجے سے پہلے تک منیٰ میں اپنے خیموں میں ہی موجود رہیں، فیصلے میں حاجیوں کی حفاظت کو ترجیح دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب میں شدید گرمی اور درجہ حرارت میں اضافے کے سبب حج کے دوران 19 عازمین زندگی کی بازی ہار چکے ہیں، مناسک حج کی ادائیگی کے دوران ہیٹ سٹروک سے مرنے والوں میں 14 اردنی اور 5 ایرانی شہری شامل ہیں۔

سعودی عرب نے ابھی تک جاں بحق افراد کے حوالے سے کسی قسم کی تفصیلات فراہم نہیں کیں تاہم عازمین کو گرمی اور موسم کی شدت سے بچانے کیلئے متعدد اقدامات کیے گئے ہیں جیسے موسم کنٹرول کرنیوالے علاقے، پانی کی تقسیم یقینی بنائی جاتی ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں